33 C
Lucknow

کووڈ نے ہمیں اپنی اندرونی صلاحیت کا احساس دلایا: ڈاکٹر جتیندر سنگھ

Urdu News

ڈاکٹر جتیندر سنگھ، مرکزی وزیر مملکت (آزادانہ چارج) وزارت ارضیاتی سائنسز، وزیر مملکت (آزادانہ چارج) وزارت سائنس اور ٹیکنالوجی، وزیر اعظم کے دفتر اور عملہ اور عوامی شکایات کی وزارت کے وزیر مملکت نے آج کہا کہ کشمیر میں زراعت اور ڈیری کے شعبوں میں اسٹارٹ اپ کی بڑی صلاحیت موجود ہے۔ جس کی ابھی تک بڑے پیمانے پر دریافت نہیں کی گئی ہے۔

انہوں نے کہا، اگرچہ کووڈ  کا حملہ  بالکل اچانک ہوا تھا، لیکن اس نے ہمیں اپنی اندرونی صلاحیتوں اور استعداد کا احساس دلایا۔

وہ شیر کشمیر یونیورسٹی آف ایگریکلچرل سائنسز اینڈ ٹیکنالوجی(ایس کے یو اے ایس ٹی) کے شالیمار کیمپس میں منعقدہ دو روزہ بین الاقوامی کانفرنس برائے کورونا وائرس کے افتتاح کے موقع پر خطاب کر رہے تھے۔

ڈاکٹر سنگھ نے کہا کہ بیماریاں وقت کے ساتھ ساتھ  ارتقا پذیر رہتی ہیں اور پوری طبی برادری کووڈ کی وجہ سے پیدا ہونے والے چیلنج کے لیے تیار نہیں تھی۔ انہوں نے تمام اسٹیک ہولڈرز کی کوششوں کو سراہا کہ انہوں نے تمام تر مشکلات اور روکاوٹوں کے باوجود چیلنج کا  کامیابی سےمقابلہ کیا ۔

ہندوستان میں ٹیکہ کاری کی کامیاب مہم پر تبصرہ کرتے ہوئے، وزیر موصوف نے کہا کہ ہندوستان نے بہت سے یورپی ممالک کے مقابلے میں بہت بہتر کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے اور یہ وزیر اعظم جناب نریندر مودی کی قیادت کی بدولت ہی ممکن ہوا ہے۔

ڈاکٹر سنگھ نے وبائی امراض کے خاتمے کے فوراً بعد اپنی نوعیت کی اس پہلی کانفرنس کے انعقاد کے لیے ایس کے یو اے ایس ٹی کے حکام کو مبارکباد دی۔ انہوں نے کہا کہ تمام لوگ اس تھیم سے جڑے ہوئے ہیں اور سبھی کسی نہ کسی طرح اسٹیک ہولڈرز ہیں۔

ڈاکٹر سنگھ نے اس بات پر خوشی کا اظہار کیا کہ بایو ٹکنالوجی کے محکمے نے وبائی امراض کے دوران کچھ اہم قسم کی تحقیق کے لیے فنڈ فراہم کیا ہے اور انہوں نے یہ  امید بھی ظاہر کی کہ یہ محکمہ مستقبل میں بھی اس سمت میں کام  کرتا رہے گا۔

وزیر  موصوف نے ملک کے نوجوانوں کی بے پناہ صلاحیتوں اور خاص طور پر جموں و کشمیر کے مرکز کے زیر انتظام علاقے کے نوجوانوں کی صلاحیتوں کے بارے میں بات کی۔ انہوں نے کہا کہ یہ ہماری ذمہ داری ہے کہ ہم بہترین دماغوں کی تلاش کریں اور انہیں ہر طرح کی مدد فراہم کریں تاکہ وہ جس چیز کے حصول کے لیے  جدوجہد میں مصروف ہیں اسے حاصل کر سکیں۔

اس بات پر تبصرہ کرتے ہوئے کہ نوجوانوں کو سرکاری ملازمتوں پر انحصار کرنے کی عادت کو ترک کرتے ہوئے معاش کے  دیگر ذرائع  کی تلاش اور جستجو  جاری  رکھنا چاہئے، ڈاکٹر سنگھ نے کہا کہ اسٹارٹ اپس مستقبل کی چیز ہیں اور نوجوانوں کو اپنے طرز فکر میں تبدیلی  لانے کے لئے خود کو تیار کرنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستان میں اس وقت  تقریباً 70,000 اسٹارٹ اپس ہیں جبکہ کچھ سال پہلے صرف چند سو تھے۔

ڈاکٹر سنگھ نے کہا کہ زراعت اور ڈیری کے شعبے کشمیر جیسی جگہ میں بے پناہ صلاحیت کے حامل ہیں اور نوجوانوں کو ان شعبوں میں ان کے سامنے موجود مواقع کا جائزہ لینا چاہیے۔ انہوں نے نوجوانوں کو اپنے لیے روزگار پیدا کرنے والے یونٹس کے قیام میں حکومت کی جانب سے ہر ممکن مدد کا یقین دلایا۔

وزیر محترم نے کہا کہ دنیا نے ایک عالمی رہنما کے طور پر جناب نریندر مودی کو دیکھنا شروع کر دیا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ دنیا بھارت کی قیادت کو تسلیم کرنے کے لیے تیار ہے لیکن سوال یہ ہے کہ کیا ہم دنیا کی قیادت کرنے کے لیے تیار ہیں؟

Related posts

ڈگری سے معیارحیات میں کوئی تعاون نہیں ملتا اگرعوام خصوصاًخواتین اپنے حقوق کے لئے آواز نہ اٹھائیں:

وزیر اعظم کی پرگتی کے ذریعے ملاقات

وزیراعظم کا چھتیس گڑھ کے گورنر بلرام جی داس ٹنڈن کے انتقال پر اظہار تعزیت