ملک میں خریف – 2021 کے سیزن کے دوران فرٹیلائزر کی دستیابی کو یقینی بنانے کے لئے حکومت کے ذریعے کئے گئے اقدامات

Image default
Urdu News

نئی دلّی:ربیع 21-2021 ء کے سیزن کے دوران پورے ملک میں کیمیائی کھاد  کی دستیابی  اطمینان بخش رہی ۔  کووڈ – 19 وباء سے متعلق  مختلف چیلنجوں کے باوجود  کیمیائی  کھاد کی پیداوار  ، در آمد اور نقل و حمل  بر وقت اور اطمینان بخش رہی ۔

          زراعت اور کسانوں  کی بہبود کے محکمے  ( ڈی اے اسی اینڈ  ایف ڈبلیو ) نے خریف – 2021 ء کے سیزن کے لئے ریاستوں / یو ٹی کے صلاح و مشورے سے مختلف  قسم کے فرٹیلائزر کی ضرورت کا جائزہ لیا اور   فرٹیلائزر کے محکمے کو اس سے مطلع کر دیا ہے ۔  فرٹیلائزر کے محکمے نے   کیمیاوی کھاد   تیار کرنے والوں کے ساتھ صلاح و مشورہ کرکے  ملک میں ، اِس کی پیداوار کا ہدف  مقرر کر دیا ہے  اور اس کی نگرانی کی جا رہی ہے ۔

          یوریا  کی ملک میں  پیداوار  اور  اس کی ضرورت   کے درمیان فرق   کو  وقت پر  در آمد کرکے  پورا کیا جائے گا ۔ پی اینڈ کے فرٹیلائزر  کی درآمدات  او جی ایل کے تحت   ( اوپن  اور جنرل لائسنس )  آتی ہے   ، جس میں  فرٹیلائزر کی کمپنیاں  اپنی ضروریات کے مطابق ، اِس کی درآمد کرنے کے لئے آزاد ہیں ۔

          خریف – 2021 ء کے سیزن کی تیاریوں کا جائزہ لینے کے لئے   مرکزی وزیر  ( سی اینڈ ایف ) جناب  ڈی وی سدا نند گوڑا نے فرٹیلائزر کی مختلف کمپنیوں کے  سی ایم ڈی / ایم ڈی کے ساتھ  15 مارچ ، 2021 ء کو جائزہ میٹنگ کی ۔  اس کے بعد  یکم اپریل ، 2021 ء کو  فرٹیلائزر کے سکریٹری  کی صدارت میں   عمل درآمد کا جائزہ لینے کے لئے ایک اور میٹنگ  کی گئی ۔   فرٹیلائزر کی کمپنیوں نے میٹنگ میں یہ بھی بتایا کہ   پی اینڈ کے فرٹیلائزر  کے لئے خام مال کی قیمت میں اضافہ ہو گیا ہے ۔

          پیچیدہ فرٹیلائزر  کی قیمت پر نظرِ ثانی   کے معاملے پر   مرکزی وزیر  جناب  ڈی وی سدا نند گوڑا نے فرٹیلائزر اور افکو  کے اعلیٰ عہدیداروں اور  نمائندوں کے ساتھ  8 اپریل ، 2021 ء کو میٹنگ کی  اور افکو کو مشورہ  دیا گیا کہ وہ   موجودہ  فرٹیلائزر کو   کسانوں   کو پرانی قیمت پر ہی فروخت  کریں ۔ افکو نے اِس بات کی تصدیق کی کہ وہ  11.26 ایل ایم ٹی  ڈی اے پی / پیچیدہ فرٹیلائزر پرانی قیمت پر ہی فروخت کریں گے ۔

          فرٹیلائزر کے سکریٹری کی صدارت میں ایک اور  میٹنگ   9 اپریل ، 2021 ء کو منعقد کی گئی ، جس میں  پی اینڈ کے فرٹیلائزر  کی دستیابی کا جائزہ لیا گیا ۔

          تمام کمپنیوں کے لئے ایک واضح پیغام ہے کہ حالیہ برسوں میں   کیمیائی کھاد کی دستیابی اطمینان بخش رہی ہے  ۔ بھارت کے فرٹیلائزر  ایسوسی ایشن نے  بھی ایک جائزہ پیش کیا ہے ، جس میں ریاستوں میں پہلے سے موجود فرٹیلائزر کے بارے میں بتایا گیا ہے ، جو آنے والے تین مہینوں کے لئے کافی ہو گا ۔  حکومت   کسانوں کے مفاد میں فرٹیلائزر  کی دستیابی اور  اس کی قیمت پر قریبی نظر رکھے ہوئے ہے ۔

Related posts

سول سروسز (مین ) امتحان 2016 کی ریزرو لسٹ

ای سی آئی بنگلورو میں 2019-21 سے متعلق اے-ویب چیئر سنبھالنے کی غرض سے عالمی انتخابی اداروں کی ایسوسی ایشن کی چوتھی جنرل اسمبلی کی میزبانی کرے گا

بالواسطہ ٹیکسوںاور کسٹمز کا سینٹرل بورڈ نے ،کوچی میں عالمی کسٹمز تنظیم کی ایشیا بحرالکاہل خطے کے کسٹمز انتظامیہ کے علاقائی سربراہوں کی میٹنگ کا اہتمام کیا