آکسیجن ایکپسریس نے ملک میں 28000 میٹرک ٹن سے زیادہ مائع میڈیکل آکسیجن کی فراہمی کی

Image default
Urdu News

ہندستانی ریل تمام رکاوٹوں کو  پار کرتے ہوئے  اور نئے   حلوں کو نکال کر  ملک کی مختلف ریاستوں  میں  لیکویڈ آکسیجن (ایم ایم او)  پہنچانا جاری رکھے ہوئے ہے۔

آکسیجن ایکسپریس  ملک کی خدمت میں لیکویڈ میڈیکل آکسیجن پہنچانے میں 28000 میٹرک ٹن کو پار کرگئی ہے۔

ہندستانی ریل کے ذریعہ  ابھی تک ملک کی  مختلف ریاستوں میں 1628 سے زیادہ ٹینکروں میں  28060 میٹرک ٹن سے زیادہ  لیکویڈ میڈیکل آکسیجن (ایل ایم او) پہنچائی  گئی ہے۔

واضح رہے کہ  397 آکسیجن ایکسپریس  گاڑیوں نے اپنا سفر پورا کرکے  مختلف ریاستو ں کو امداد پہچائی ہے۔

اس ریلیز کے جاری ہونے تک   پانچ آکسیجن ایکسپریس گاڑیاں   24 ٹینکروں میں 494 میٹرک ٹن سے زیادہ   ایل ایم او  لے کر چل رہی ہیں۔

آکسیجن ایکسپریس کے ذریعہ  تمل ناڈو میں 3900 میٹرک ٹن سے زیادہ  لیکویڈ میڈیکل آکسیجن پہنچائی گئی ہے۔

آکسیجن ایکسپریس سے آندھراپردیش اور کرناٹک ہر ایک میں بالترتیب 3100  اور 3400 میٹرک ٹنن سے زیادہ   لیکویڈ میڈیکل آکسیجن  پہنچائی گئی ہے۔

آکسیجن ایکسپریس نے   45  دن پہلے 24 اپریل کو  مہاراشٹر میں 126 میٹرک ٹن لیکویڈ میڈیکل آکسیجن  کی ڈیلیوری کرنے کے ساتھ  اپنا کام  شروع کیا تھا۔

بھارتی ریلوے کی یہ کوشش رہی ہے  کہ  آکسیجن  کی درخواست کرنے والی   ریاستوں کو  کم سے کم   ممکنہ وقت میں زیادہ سے زیادہ   ممکنہ آکسیجن پہنچائی جاسکے۔

آکسیجن ایکسپریس کے ذریعہ 15 ریاستوں، اتراکھنڈ، مہاراشٹر، کرناٹک،  آندھراپردیش، ، مدھیہ پردیش،   راجستھان، تمل ناڈو،  ہریانہ، تلنگانہ  ، پنجاب ، کیرالہ، دہلی  ، اترپردیش،  جھارکھنڈ اور آسام کو  آکسیجن  مدد پہنچائی گئی۔

اس ریلیز کے جاری ہونے تک مہاراشٹر میں 614 میٹرک ٹن آکسیجن، اترپردیش  میں تقریباً 3797 میٹرک ٹن، مدھیہ پردیش میں 656 میٹرک ٹن، دہلی میں 5722 میٹرک ٹن، ہریانہ میں 2354 میٹرک ٹن،راجستھان میں 98 میٹرک ٹن، کرناٹک میں 3450 میٹرک ٹن، اتراکھنڈ میں 320 میٹرک ٹن، تمل ناڈو میں 3972 میٹرک ٹن، آندھراپردیش میں 3130 میٹرک ٹن، پنجاب میں 225 میٹرک ٹن، کیرل میں 513 میٹرک ٹن، تلنگانہ میں 2765 میٹرک ٹن ، jharکھنڈ میں 38 میٹرک ٹن اور آسام میں 400 میٹرک ٹن آکسیجن پہنچائی گئیہے۔

اب تک آکسیجن ایکسپریس نے ملک بھرکی 15 ریاستوں میں تقریباً  39 شہروں میں ایل ایم او  پہنچائی ہے۔ ان شہروں میں  اترپردیش میں لکھنؤ، وارانسی، کانپور،   بریلی، گورکھپور،  اور آگرہ ، مدھیہ  پردیش میں ساگر، جبلپور،   کٹنی اور بھوپال ، مہاراشٹر  کے ناگپور، ناسک، پنے ممبئی اور شولا پور، تلنگانہ میں حیدرآباد،  ، ہریانہ میں فرید آباد اور گرو گرام،  دہلی میں  تغلق آباد ، دہلی کینٹ اور اوکھلا  ، راجستھان میں کوٹہ اور کانکپور  ، کرناٹک میں بنگلورو، اتراکھنڈ میں  دہرہ دون،  آندھراپردیش،  میں نیلور،   کیرل میں ارنکاکلم میں تھرویلور، چنئی ، توتکورین  ، کوئمبٹور اور مدورئی ، پنجاب میں  بھٹنڈا  اور فلور، آسام میں کامروپ اور اترکھنڈ میں رانچی شامل ہیں۔

ریلوے نے آکسیجن سپلائی  مقاموں کے ساتھ مختلف  شہراہوں  کی میپنگ کی ہے اور ریاستوں کی بڑھتی ہوئی   مانگ  کے مطابق  اپنی تیاری  کی ہوئی ہے۔  بھارتی ریلوے کو  ایل ایم او لانے کے  لئے ٹینکر  ریاستیں فراہم کرتی ہیں۔

آکسیجن امداد  تیز رفتار سے پہنچانے کو یقینی بنانے کے لئے    ریلوے  آکسیجن ایکسپریس مال گاڑی  چلانے میں   نئے اور بے مثال  معیارات او ر اسٹینڈرز قائم کررہی ہے۔  طویل فاصلے کے  زیادہ تر معاملوں میں مال گاڑی کی  اوسط رفتار    55 کلو میٹر سے   زیادہ رہی ہے۔

 ریل راستوں کو کھلا رکھا گیاہے   اور اعلی  احتیاط برتی جارہی ہے تاکہ آکسیجن ایکسپریس وقت پر پہنچ سکے۔  یہ سبھی کام  اس طرح کئے جارہے ہیں کہ مال برداری  میں کمی نہ ہوئے۔

نئی آکسیجن لے جانا بہت ہی محرک کام ہے اور اعدادوشمار  ہر وقت   بدلتے رہتے ہیں۔  دیر رات   آکسیجن سے بھری  اور زیادہ آکسیجن   گاڑیاں اپنا سفر   شروع کریں گی۔

Related posts

جناب دھرمیندر پردھان نے تیل اور گیس کے شعبے کی اسٹیل کی ضرورتوں کو پورا کرنے کے لئے گھریلو اسٹیل کے استعمال میں اضافے اور درآمدات پر انحصار کو کم کرنے پر زور دیا

صدرجمہوریہ رام ناتھ کوند نے راشٹرپتی بھون میں ایل پی جی پنچایت کی میزبانی کی

آیوش کی وزارت کی طرف سے قوت مدافعت کی مہم کے لیے شروع کیے گیے آیوش کا ڈیجیٹل اسپیس میں پرجوش استقبال کیا گیا