Home » Urdu News » وزیر اعظم نے تیروپ پور میں ای ایس آئی سی کثیر جہتی اسپیشلیٹی اسپتال کا سنگ بنیاد رکھا

وزیر اعظم نے تیروپ پور میں ای ایس آئی سی کثیر جہتی اسپیشلیٹی اسپتال کا سنگ بنیاد رکھا

نئی دہلی، وزیر اعظم جناب نریندرمودی نے تمل ناڈو کے تیروپ پور کا دورہ کیا اور ریاست میں متعدد ترقیاتی منصوبوں کا افتتاح کیا۔ وزیر اعظم نے تیروپ پور کے پیرومانلّورگاؤں میں متعدد ترقیاتی منصوبوں کا افتتاح کیا۔

انھوں نے تیروپ پور میں ملازمین کے اسٹیٹ انشورینس کارپوریشن (ای ایس آئی سی)کے کثیر جہتی اسپیشلیٹی اسپتال کا سنگ بنیاد رکھا۔ای ایس آئی ایکٹ کے تحت  100 بستروں والا جدید ترین سہولیات سے آراستہ یہ اسپتال تیروپ پور اور آس پاس کے علاقوں میں رہ رہے ایک لاکھ سے زائد ملازمین اور ان کے خاندانوں کی طبی ضروریات پوری کرے گا۔ اس سے پہلے شہرمیں کام کر رہے دو ای ایس آئی سی ڈسپنسری کے ذریعہ مذکورہ لوگوں کی ضروریات پوری ہوتی تھی۔ کسی ایڈوانس طبی ضرورت کے لیے انھیں کوئمبٹور میں واقع ای ایس آئی سی میڈیکل کالج ہاسپیٹل پہنچنے کے لیےکم از کم 50 کلو میٹر کا سفر طے کرنا پڑتا تھا۔

وزیر اعظم نے ای ایس آئی سی اسپتال ، چنئی کو قوم کے نام وقف کیا۔ 470 بستروں والے جدید ترین سہولیات سے آراستہ یہ اسپتال میڈیکل کے ہر شعبہ میں معیاری علاج مہیا کرے گا۔

وزیر اعظم نے تریچی ایئرپورٹ پر نئی مربوط عمارت اور چنئی ایئرپورٹ کی تجدید کاری کا سنگ بنیاد بھی رکھا۔ تریچی کی اِس نئی مربوط ٹرمینل عمارت کے ساتھ  یہ ایئرپورٹ سالانہ 3.63 ملین مسافروں  اور مشغول ترین اوقات میں 2900 مسافروں  کو سہولیات فراہم کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔ چنئی ایئرپورٹ کی تجدید کاری کی جائے گی جس میں ای-گیٹس اور بایومیٹرک پر مبنی مسافروں کی اسکریننگ کے نظام، دیگر متعدد سہولیات شامل ہوں گے۔ اور موجودہ بین الاقوامی روانگی ٹرمینل میں بھیڑکم ہوجائے گی۔

بھارت پیٹرولیم کارپوریشن لمیٹڈ (بی پی سی ایل) کے اِنّور ساحلی ٹرمینل کو وزیر اعظم نے اِس موقع پر قوم کے نام وقف کیا۔یہ ٹونڈیار پیٹھ فیسلیٹی کا ایک بڑا اور بہتر متبادل ثابت ہوگا۔ اِس ٹرمینل کی شروعات سے پیداوار کو کوچی کے ساحل سے منتقل کیا جاسکتا ہے جس سے بذریعہ روڈ  آمد ورفت کے اخراجات میں بھی کمی آئے گی۔

وزیر اعظم نے چنئی پورٹ سے چنئی پیٹرولیم کارپوریشن لمیٹڈ(سی پی سی ایل) کے منالی ریفائنری تک کے لیے نئی خام تیل کی پائپ لائن کا بھی افتتاح کیا۔جدید ترین تحفظاتی سہولیات سے آراستہ یہ پائپ لائن خام تیل کی محفوظ اور قابل اعتماد سپلائی کو یقینی بنائے گا نیز تمل ناڈو اور پڑوسی ریاستوں کی ضروریات بھی پوری کرے گا۔

وزیر اعظم نے اے جی – ڈی ایم ایس میٹرو اسٹیشن اور واشرمین پیٹھ میٹرو اسٹیشن کے مابین چلنے والی چنئی میٹرو کے ایک سیکشن کے لیے مسافرین خدمات کا بھی افتتاح کیا۔ 10 کلو میٹر کا یہ سیکشن چنئی میٹرو کے پہلے مرحلہ کا ایک حصہ ہے۔ اس کے ساتھ ہی مرحلہ ایک  کا 45 کلو میٹر آپریشنل ہوگیا ہے۔ بعد ازاں وزیر اعظم اپنے دورے کے آخری مرحلے میں ہبلی کے لیے روانہ ہوگئے۔

About admin